Sardar Zubair

اسکے پیچھے وردی ہے

Political

پاکستان کے حالات بہترین نہیں تو کم از کم بہتر ضرور چل رہے تھے کہ نائن ایلون کا واقعہ ہو گیا اور جنرل مشرف نے پاکستان کا رخ ایک ایسی طرف موڑ دیا جہاں سے واقعی ہم پتھر کے زمانے میں چلے گئے ہم امریکا کی جنگ میں بلا وجہ کود پڑے اور پھر ہم نے ٨٣٠٠٠ جانوں کی قربانی بھی دی اور ١٥ ارب ڈالر کا نقصان بھی کیا.اس طرح پاکستان محاشی لحاظ سے پیچھے چلا گیا، انفراسٹرکچر تباہ ہو گیا ، اسکول، ہسپتال تباہ ہو گئے اور لوگ نقل مکانی کرنے پر مجبور ہو گئے. پاکستان ایک فیلڈ اسٹیٹ کے طور پر جانا جانے لگا، بیرونی انویسٹمنٹ نہ ہونے کے برابر ہو گئی، حتہ کے پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ بھی ختم ہو گئی. جرنل مشرف کی حکومت ختم ہونے تک پاکستان میں دشت گردی اس حد تک بڑ چکی تھی کے لوگ عوامی اجتمات میں جانے سے ڈرتے تھے. جگہ جگہ پولیس اور آرمی کی چیک پوسٹس تھی اور ایک اجیبوغریب وحشت کا عالم رہتا تھا. زرداری حکومت سے لے کر آج تک پھر جو بھی ہوا اسکے پیچھے واقعی وردی ہے. پاکستان آرمی نے جس دلیری کے ساتھ اس جنگ کو اپنے منطقی انجام تک پنچایا اسکی مثال تاریخ میں نہیں ملتی. آرمی اس ناسور کو جڑ سے ختم کرنے کے لیے پہلے دن سے ہی برسرے پیکر تھی مگر پھر آرمی پبلک اسکول پر حملہ ہو گیا جس میں ہمارے سینکڑوں بچے شہید ہو گئے. جرنل راحیل شریف نے آرمی پبلک اسکول پر حملے کے بعد ایک proper منصوبہ بندی کے ساتھ اس جنگ کو لڑنے کا فیصلہ کیا اور اس طرح اس خاکی وردی والوں نے اپنی جانوں کے نذرانے پیش کیئے. اور پھر ایک بار پاکستان کو وہیں لا کھڑا کیا جہاں پاکستان پہلے مجود تھا. سوات میں فوج امن واپس لے آئ، دیر میں امن ہو گیا ، لوگ سوات کلام سیر کے لیئے جانے لگے، سوات کا ٹورازم پھر انڈسٹری بن گیا. جنوبی وزیرستان شمالی وزیرستان میں امن لوٹ آیا ، مارکیٹس بنی، کیڈٹ کالج، اسکول بنے اور اس طرح آرمی نے ریکارڈ ترقیاتی کاموں کا جال بچھا دیا. پشاور جہاں کے لوگ اسلام آباد یا دوسرے شہروں کو منتقل ہو گئے تھے واپس آنے لگے اور سونے پے سوھگا کے پی کے میں عمران خان کی حکومت آ گئی جس نے حقیقی تبدلی اور رفاہ عامہ کے کاموں کے لیے بے پناہ کام کیے. پھر دیکھتے ہی دیکھتے آرمی نے جنوبی وزیرستان اور شمالی وزیرستان میں کرکٹ گراؤنڈ تک بنا ڈالے نیشنل پلیئرز نے کرکٹ اکڈمیز بنا دیں. ایک وقت تھا جب پاکستان میں روزانہ کی بنیاد پر درجنوں دھماکے ہوتے تھے، روز کئی بچے یتیم ہوتے تو کہیں درجنوں مائیں بیوہ ہوتی، کوئی ایسا دن نہ گزرتا تھا جب بوڑا باپ اپنے بیٹے کی لاش نہ اٹھا رہا ہوتا، کراچی جسے شہر میں خوف وہراس کا یہ عالم تھا کے لوگ اپنے ساتھ موبائل تک لے کے نہیں نکلتے تھے ، پھر یوں ہوا کے عید کے ایک روز قبل کراچی کے لوگوں نے اربوں کی شوپنگ کر ڈالی

پاکستان آرمی نے 2002 میں آپریشن سٹارٹ کیے جس میں مسلح دہشتگردوں کے خلاف علان جہاد تھا ، پھر اسی طرز کے آپریشنز  کیے. یاد رہے کچھ آپریشنز جرنل مشرف کے دور میں ہی سٹارٹ ہو گئے تھے مگر 2013 میں آپریشن ضربِ عضب نے دشت گردوں کی کمر توڑ کر رکھ دی. پوری دنیا نے پاکستان کے دہشت گردی کے خلاف کامیابی کو تسلیم کیا . آج پاکستان میں مکمل امن ہے، ناکے تک ختم ہو گئے ہیں، انٹرنیشنل کرکٹ بحال ہونے لگی ہے، بیرونی سرمایا کاری میں اضافہ ہو رہا ہے ، اور پاکستان ترقی اور خوشالی کی طرف گامزن ہے . آج اس ایٹمی اور روشن پاکستان کے پیچھے واقعی وردی ہے جو کچھ ملک دشمن عناصر کو ایک آنکھ نہیں بہا رہی . ہماری دعا ہے کے اس ترقی کرتے پاکستان کے پیچھے ہمشہ وردی رہے

 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *